ٹیوٹرنگ کی وضاحت

2011 سے Leistungen für Bildung und Teilhabe (تعلیم اور شرکت کے فوائد) و بچوں، نوعمروں اور نوجوان بالغوں کی ماہانہ ضروریات کے علاوہ ان کے لیے زیر غور رکھا گیا ہے۔
اس میں اضافی غیر نصابی ٹیوٹرنگ/آموزشی معاونت بھی شامل ہے۔

  • ان فوائد کے لیے کون درخواست دے سکتا ہے؟

    اسکولی طلبا/ طالبات جو

    • جنرل یا ووکیشنل (پیشہ ورانہ) اسکول جاتے ہیں،
    • انھیں کوئی تربیتی ادائیگی موصول نہیں ہوتی،
    • 25  سال سے کم عمر کے ہیں،

    جو Sozialgesetzbuch (SGB II) کی کتاب II ، Sozialgesetzbuch (SGB XII) جرمن سوشل انشورنس کوڈ کی کتاب XII، یا  Asylbewerberleistungsgesetz (AsylbLG – طالب پناہ فوائد قانون)، سکونتی فائدہ (Wohngeld)  یا بچوں کے فوائد (Kinderzuschlag) کے مطابق فوائد حاصل کرتے ہوں۔

  • غیر نصابی ٹیوشن / آموزشی مدد کیا ہے؟

    کئی بار طلبا کو ایک مضمون سیکھنے میں دشواری ہوتی ہے، اور تب کلاس ٹسٹ میں ان کے گریڈ خراب ہوتے ہیں۔ اگر بری کارکردگی جاری رہتی ہے، تو ہو سکتا ہے رپورٹ کارڈ گریڈ اطمینان بخش نہ ہو۔ اسے اس آموزشی مشکل اور مناسب مدد کے لیے فعال کارکردگی کے لیے ٹیوٹرنگ خرچ کی کی ادائیگی کے ذریعہ روکا جا سکتا ہے۔
    اس کی پیشگی شرط یہ ہے کہ اسکول مدد کی ضرورت کی تصدیق کرتا ہے، ٹیوٹرنگ کی سفارش کرتا ہے اور کوئی دوسری قابل موازنہ اسکولی سہولت موجود یا اطمینان بخش نہیں ہے۔ دو مضامین میں ٹیوٹرنگ اسباق ممکن ہیں، فی ہفتہ دو گھنٹوں کے لیے، اگلے رپورٹ کارڈ کے اجرأ کے وقت تک کے لیے۔

  • یہ کیسے کام کرتا ہے؟

    اس وقت تک جب تک رپورٹ کارڈ میں گریڈ مایوس کن طریقے سے خراب ہوں (4, 5  یا  6) ، ٹیوٹرنگ کے خرچ کی ادائیگی کے لیے ایک درخواست جمع کی جانی چاہیے۔ اسے کرنے کے لیے، Nachhilfe & Durchblick (ٹیوٹرنگ اور بصیرت) : : لیں “Komm – mach mit” چیک بک سے فارم لیں، اور، درخواست کے سامنے کا صفحہ پر کریں۔ اسکول سے درخواست کے پچھلے حصے کو مکمل کرنے کے لیے کہیں، کیونکہ درخواست کے ساتھ ٹیچر/ اسکول کا ایک تخمینہ بھی درکار ہے۔ تشخیص کی بنیاد پر انتظامیہ فائدے کی فراہمی کے حوالے سے بنیادی سہولت کا فیصلہ کرتی ہے۔ اگر مناسب ٹیوٹر یا آموزشی معاونت کے معاہدے کا مسودہ پہلے سے موجود ہے، تو اس پر منظوری کے ساتھ غور کیا جائے گا اور معاونت کا کام شروع ہو سکتا ہے۔ . اگر والدین نے ابھی تک کوئی مناسب معاونت کا امکان تلاش نہیں کیا ہے، تو نوٹیفکیشن موصول ہونے کے بعد فیصلہ کیا جا سکتا ہے۔ معاہدے کی حوالگی بعد میں ہوتی ہے، مناسب اور ضروری ٹیوٹرنگ کا مناسب خرچ Pro Arbeit کی جانب سے اٹھایا جاتا ہے۔ ادائیگی براہ راست خدمت فراہم کنندہ کو ہوتی ہے۔ اگر آموزشی تکلیف کا علاج منظوری کی سطح پر نہیں ہو سکتا، تو برائے مہربانی نئی درخواست دیں۔

  • ٹیوٹرنگ/ آموزشی معاونت کب منظور نہیں ہوتی ہے؟
    • اگر اسکول ضرورت کی تصدیق نہیں کرتا، یا کارکردگی کی سطح اطمینان بخش سے بہتر ہے،
    • اگر کارکردگی میں کمزوری کی وجہ غیر معافی شدہ غیر حاضری کے دن ہیں یا طالب علم کا مسلسل غلط رویہ ہے،
    • اگر ایک بہتر قسم کے اسکول کے خصوصی طور پر خواہش کی گئی ہے۔

Komm – mach mIt مکمل کرنے کے رہنما اصول
آپ خرچ کا اس ماہ کی ابتدا سے دعوی کر سکتے ہیں جس میں درخواست جمع کی گئی ہے۔ درخواستیں بچوں، نوجوانوں اور جوان بالغوں کے لیے دی جا سکتی ہیں اگر وہ 25 سال سے کم عمر کے ہیں، وہ اسکول جاتے ہیں اور انھیں کوئی تربیتی ادائیگی موصول نہیں ہوتی۔ ان بچوں کے لیے بھی درخواستیں دی جا سکتی ہیں اگر وہ نرسری اسکول جاتے ہیں۔ آپ درخواست فارم پر مزید رہنما اصول حاصل کر سکتے ہیں۔

ڈیٹا کے تحفظ پر اہم رہنما اصول
آپ کی معلومات کو قانونی ریگولیشن (§§ 60 to 65 Book 1 of the Sozialgesetzbuch (SGB I - جرمن سوشل انشورنس کوڈ ) اور § 67 a, b, c بک 10 کا Sozialgesetzbuch (SGB X)) ریکارڈ کیا جاتا ہے۔ آپ کی معلومات کو صیغۂ راز میں رکھا جائے گا (سوشل رازداری کے اصول)۔